اناؤ ریپ کیس:نامزد ملزم وزیر کے داماد کا نام بھی شامل

لکھنؤ: 31جولائیâیواین آئیáسڑک حادثے میں شدید طور سے زخمی زندگی و موت کی لڑائی لڑی رہی اناؤ ریپ کیس متأثرہ کے معاملے میں مرکزی جانچ ایجنسیâسی بی آئیá کی جانب سے درج کئے گئے نامزد ملزموں کی فہرست میں اترپردیش کی یوگی حکومت کے ایک وزیر کے داماد کا نام بھی شامل ہے ۔ رائے بریلی کے گرو بخش گنج علاقے میں اتوار کو ہوئے سڑک حادثے میں شدید طور سے زخمی اناؤ ریپ کیس کی متأثرہ اور اس کے وکیل کو وینٹی لیٹر پر ہیں۔ اس حادثے میں متأثرہ کی چچی اور ان کی بہن کی موت ہوگئی تھی۔سی بی آئی کو اس معاملے کی جانچ کا ذمہ دیا گیا ہے جس کی ایف آئی آر میں اناؤ میں نواب گنج کے بلاک پرمکھ ارون سنگھ کا نام ہے ۔ ارون فتح پور کے رکن اسمبلی اور اترپردیش حکومت کے وزیر روندر پرتاپ سنگھ عرف دھنی سنگھ کے داماد ہیں۔ دلچسپ ہے کہ متأثرہ کی کار کو ٹکر مارنے والا ٹرک فتحپور کا ہے اور اس کا مالک بھی اسی ضلع کے ہیں۔ ذرائع نے بدھ کو بتایا کہ ارون عصمت دری کے ملزم کلدیپ سنگھ سینگر کا بے حد قریبی ہے ۔ اس کا کردار پر پہلے بھی سوالیہ نشان لگتے رہے ہیں لیکن ایف آئی آر میں اس کا نام کبھی نہیں آیا لیکن اس حادثے میں انہیں بھی ملزم بتایا گیا ہے ۔ سی بی آئی نے اس معاملے میں 25لوگوں کے خلاف ایف آئی آر درج کی ہے جس میں نو کے خلاف نامزد ملزم بنایا گیا ہے ۔ ایف آئی آر میں بنگرا مئو کے بی جے پی رکن اسمبلی کلدیپ سنگھ سینگر، اس کے بھائی منوج کے خلاف قتل،قتل کی کوشش، مجرمانہ سازش کی دفعات کے تحت ایف آئی آر درج کی گئی ہے ۔ وہیں کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی واڈرا نے سینگر کی برخاستگی کو حوالے سے بی جے پی سے سوال پوچھا ہے ۔انہوں نے اس ضمن میں ٹوئٹ کر لکھا‘‘ اناؤ عصمت دری معاملہ و متأثرہ کے کنبے کا استحصال کرنا اقتدار کے تحفظ کے بغیر ممکن نہیں ہے ۔ اب پردیں کھل رہی ہیں وہ بی جے پی لیڈروں کے نام اور پولیس کی لیپا پوتی سامنے آرہی ہے ۔ کانگریس انصاف کے لئے پرعزم ہے ۔یہ لڑائی ہم مضبوطی سے لڑیں گے ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں