رانچی ٹسٹ ڈرا، دھرم شالہ میں ہوگی فیصلہ کن جنگ

21 مارچ 2017

رانچی/ پیٹرہیڈاسکمب ناٹ آؤٹ 72 اور شان مارش53کی پر جدو جہداننگز کی بدولت آسٹریلیا نے ہندستان کے خلاف تیسرے ٹیسٹ کو ڈرا کرا لیا۔ آسٹریلیا نے پانچویں اور آخری دن میچ ڈرا ختم ہونے تک دوسری اننگز میں 100اوور میں چھ وکٹ پر 204 رنز بنائے اور ٹیم انڈیا کی برتری حاصل کرنے کی امیدوں پر پانی پھیر دیا ۔تیسرا ٹیسٹ ڈرا ختم ھونے کے بعد اب دونوں ٹیمیں اب 1۔1 کی برابری پر ہیں۔سیریز کا فیصلہ اب دھرم شالہ میں 25 مارچ سے ہونے والے چوتھے اور آخری ٹیسٹ سے ہوگا۔اگر ہندستان دھرم شالہ میں جیت حاصل کرتا ہے تو وہ گواسکر۔ بارڈر ٹرافی پر قبضہ کر سکے گا لیکن اگر آسٹریلیا جیتا یا میچ ڈرا کرا گیا تو گواسکر۔بارڈر ٹرافی اس کے قبضے میں ہی رہے گی۔ہندستان کو رانچی ٹیسٹ جیتنے کی پوری امید تھی جب اس نے صبح کے سیشن میں آسٹریلوی کپتان اسٹیون اسمتھ سمیت لنچ تک مہمان ٹیم کے چار وکٹ 83 رن تک گرا دیے تھے ۔ لیکن مارش اور ھیڈاسکمب نے پر جدوجہدمظاہرہ کرتے ہوئے پانچویں وکٹ کے لیے 124 رنز کی قیمتی شراکت کر کے میچ کو ڈرا کی جانب دھکیل دیا۔سال 2010۔11 کے بعد یہ پہلا موقع ہے جب کسی مہمان ٹیم نے ہندستان میں پہلی اننگز میں پچھڑنے کے بعد میچ ڈرا کرا لیا۔میچ ڈرا کرانے کا کریڈٹ پوری طرح دو بلے بازوں کو جاتا ہے جنہوں نے صبر و تحمل اور ضبط کا نمونہ پیش کرتے ہوئے ہندستانی گیند بازوں کو حاوی ہونے سے روک دیا۔مارش نے 197 گیندیں کھیل کر 53 رنز میں سات چوکے لگائے جبکہ ھیڈاسکمب نے 200 گیندیں کھیل کر ناٹ آؤٹ 72 رنز میں سات چوکے لگائے ۔مارش اور ھیڈاسکمب کے درمیان پانچویں وکٹ کے لیے 124 رنز کی شراکت 62.1 اوور میں بنی۔اسی حقیقت سے اندازہ لگایا جا سکتا ہے کہ دونوں بلے بازوں نے اپنا وکٹ بچائے رکھنے کے لئے کتنی زبردست جدوجہد کی۔ہندستانی کپتان وراٹ کوہلی نے تمام کوششیں کیں لیکن اس شراکت کو توڑنے میں انہیں ناکامی ہاتھ لگی۔

تبصرے