صومالیہ دہشت گرد حملے میں 28افراد ہلاک، 43زخمی

27 جنورى 2017

موغادیشو/رائٹر/ صومالیہ کے دارالحکومت موغادیشو میں دہشت گردوں نے دو مختلف مقامات پر دھماکے اور حملہ کیا جس میں کم از کم 28لوگوں کی موت ہو گئی اور43دیگر زخمی ہو گئے ۔ پہلا حملہ ایسے ہوٹل پر ہوا جس کا استعمال ملک و بیرون ملک کے سیاستدان اور افسر کرتے ہیں۔ پولیس نے بتایا کہ دہشت گردوں نے ڈیا ہوٹل کے گیٹ کے پاس کھڑی ایک گاڑی میں بم دھماکہ کیا اور دھماکے کے بعد دہشت گرد ہوٹل کے اندر گھس گئے ۔ اس ہوٹل میں عام طور پر سیاستدان اور افسر ٹھہرتے ہیں۔ پولیس نے کہا کہ ہوٹل کے باہر دھماکہ ہونے کے کچھ دیر بعد اسی علاقے میں ایک اور دھماکہ ہوا جس کی زد میں وہاں کھڑے صحافی اور کچھ دوسرے لوگ بھی آ گئے ، دھماکے کی وجہ سے کئی عمارتوں کو بھی نقصان پہنچا ہے ۔ تاہم سیکورٹی فورسز کی کارروائی میں اس حملے میں شامل چاروں دہشت گردتصادم میں مارے گئے ۔ موغادیشو میونسپلٹی کے ترجمان عابد فتح عمر نے اس کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ سیکورٹی فورسز کی کارروائی میں چاروں دہشت گرد مارے گئے ہیں اور ہوٹل اب محفوظ ہے ۔ اس حملے کی ذمہ داری الشباب نے لی۔ گروپ سے متعلق اینڈالس ریڈیو نے کہا، ‘‘دہشت گردوں نے ہوٹل پر حملہ کیا ہے اور وہ ہوٹل کے اندر فائرنگ کر رہے ہیں۔’’ پولیس نے بتایا کہ دونوں دھماکوں اور تصادم میں کل 28لوگ مارے گئے اور 43دیگر زخمی ہوئے ہیں، زخمیوں کو اسپتال میں داخل کرایا گیا ہے ۔

تبصرے