امورصارفین عوامی تقسیم کاری محکمہ کے چاربڑے گودام غذائی اجناس سے خالی، فوڈ کارپوریشن آف انڈیاکی من مانیاں عروج پر،محکمہ کسی صورتحال کا مقابلہ کرنے کی پوزیشن میں نہیں

 سرینگر //اے پی آ ئی/ اس بات کاسنسنی خیز انکشاف ہوا ہے کہ امور صارفین وعوامی تقسیم کاری کی محکمہ میں پہلی با ران کے لیتہ پورہ ،گلاب باغ ،کلن گام ،کھنہ بل کے بڑے گودام جن میں لاکھوں کوئیٹل غذائی اجناس جون کے آخری ہفتے سے ذخیرہ کیاجاتاہے خالی پڑے ہوئے ہیںجس سے امورصارفین وعوامی تقسیم کاری کے محکمہ کوبھی غذائی اجناس کی تقسیم کاری میںمشکلوں کاسامناکرنا ُپڑرہاہے ۔ذرائع کے مطابق امورصارفین کے بڑے گودام خالی رہنے سے وادی کشمیر کو ناگہانی آفتوں یاجموں سرینگر شاہراہ بندرہنے کی صورت میںمشکلوں کاسامناکرنا پڑی گااورفو ڈکار پوریشن کے سامنے ہاتھ پھیلانے پرمجبور ہوناپڑے گا ۔باخبرذرائع کے مطابق ماضی میں فوڈ کارپورینش آف انڈیا 10گاڑیوں میں سے 4امورصارفین و عوامی تقسیم کاری محکموں کے گوداموں میں جمع کیاکرتا تھا تاہم پچھلے کئی ماہ سے فوڈ کارپوریشن آف انڈیانے یہ طریقہ کا رتبدیل کردیا ہے اور ملک کی مختلف ریاستوں سے کارپوریشن جتنا بھی غذائی اجناس پہنچا رہاہے وہ اپنے ہی گوداموں میںجمع کررہاہے ۔خبررساں ادارے اے پی آ ئی نے جب یہ معاملہ ڈائریکٹرامورصارفین  کے نوٹس میں لایاتو انہوں نے کہاکہ وادی میں غذائی اجنا س کی کوئی قلت نہیں ہے فوڈ کارپوریشن آف انڈیاکے ساتھ جومعاہدہ کیاگیا وہ اس  اس با ت  پرپابندہے کہ وہ امور صارفین و عوامی تقسیم کاری کے محکمہ کوغذائی اجناس فراہم کریں ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں