آئی پی ایل -12 حیدر آباد اور چینئی کے مابین آج زبردست ٹکرائو ہوگا

چنئی/یو این آئی/ آئی پی ایل کی ٹاپ ٹیم چنئی سپر کنگ اپنے آخری دو مقابلوں میں الٹ پھیر کا شکار ہونے کے بعد جیت کی پٹری پر واپسی کی کوششوں میں لگ گئی ہے اور منگل کو اپنے گھریلو میدان پر وہ سن رائزرس حیدرآباد سے ملی پچھلی ہار کا بدلہ برابر کرنے کے علاوہ پلے آف میں جگہ پکی کرنے کے اہم مقصد کے ساتھ اترے گی۔چنئی کو رائل چیلنجرز بنگلور نے دلچسپ مقابلے میں اتوار کو ایک رن سے شکست دے کر چونکایا تھا جبکہ اس سے گزشتہ میچ میں وہ حیدرآباد سے اس گھریلو میدان پر چھ وکٹ سے شکست سے دو چار ہو گئی تھی۔ آئی پی ایل ٹیبل میں مہندر سنگھ دھونی کی ٹیم 10 میں سے سات میچ جیت کر اور تین ہارنے کے بعد 14 پوائنٹس کے ساتھ سب سے اوپر ہے ، لیکن گزشتہ دو میچوں میں مسلسل ہارنے سے اس کے پلے آف کی توقعات کو جھٹکا لگا ہے ۔دوسری طرف حیدرآباد اب 9 میچوں میں 10 پوائنٹ کے ساتھ چوتھے نمبر پر ہے اور سرفہرست چار میں بنے رہنے کے لئے اسے اگلے میچوں میں اچھی کارکردگی درکار ہے ۔ اس سے آگے ممبئی 12 پوائنٹس اور دہلی 12 پوائنٹس دوسرے اور تیسرے نمبر پر ہے ۔ حیدرآباد نے چنئی کو شکست دینے کے بعد کولکاتا کو نو وکٹ سے شکست دی تھی جس سے اس کے حوصلے بلند ہوئے ہیں جبکہ چنئی گزشتہ دو میچ مسلسل ہارنے کے بعد یقینا دباؤ میں ہوگی۔
دھونی اگرچہ ٹیم کے ا سٹار کھلاڑی ہیں جو آرسی بی کے خلاف اکیلے دم پر ٹیم کو فتح کے قریب لے گئے تھے اور ایک بار پھر ان کی کارکردگی پر سب کی نگاہیں لگی ہوں گی۔ چنئی کے کپتان نے گزشتہ میچ میں 48 گیندوں میں پانچ چوکے اور سات چھکے لگا کر ناٹ آؤٹ 84 رن کی دھادار اننگز کھیلی تھی جس کی بدولت وہ آئی پی ایل کی تاریخ میں 200 چھکے لگانے والے پہلے ہندوستانی کرکٹر بھی بن گئے ہیں۔تجربہ کار وکٹ کیپر بلے باز 9 میچوں میں تین نصف سنچریوں سمیت 314 رنز بنا کر چنئی کے ٹاپ اسکورر ہیں۔ اگرچہ ٹیم کے بلے بازی آرڈر میں وسیع بہتری کی ضرورت ہے جس کی ناکامی کی وجہ سے اس نے مسلسل دو میچ گنوائے ہیں۔ ویسے چنئی کے پاس فاف ڈو پلیسس، امباٹي رائیڈو، سریش رینا، شین واٹسن اور رویندر جڈیجہ کے طور پر اچھے کھلاڑی موجود ہیں۔بنگلور کے خلاف اگرچہ ٹیم کا ٹاپ آرڈر بری طرح فلاپ رہا تھا اور واٹسن اور پلیسس دہرے ہندسے تک بھی نہیں پہنچ سکے ۔ ایسے میں بلے بازوں کو بہتر حکمت عملی دکھانی ہوگی کیونکہ حیدرآباد کا بولنگ آرڈر باقی ٹیموں کے مقابلے میں بہت مضبوط سمجھا جاتا ہے ۔حیدرآباد نے گزشتہ میچ میں کے کے آر کو 9 وکٹ سے پیٹا تھا۔اس کی ٹیم کے پاس ù جانی بیرسٹو، کپتان کین ولیمز، وجے شنکر موجود ہیں جو بڑے رن رنز اسکورر ہیں۔ وارنر نے 67 اور بیرسٹو نے ناٹ آؤٹ 80 رنز کی نصف سنچری اننگز کھیل کر اکیلے ہی دم پر ٹیم کو فتح دلا دی تھی۔
 آسٹریلیا کی عالمی کپ ٹیم میں جگہ بنا چکے وارنر کو روکنا چنئی کے لئے بڑا چیلنج ہوگا جو ٹورنامنٹ میں 9 میچوں میں چھ نصف سنچری اور ایک سنچری بنا چکے ہیں۔
وارنر کے ان میچوں میں 73.85 کے اوسط سے 517 رنز ہیں جبکہ بیرسٹو (445) دوسرے نمبر پر ہیں۔ چنئی کے خلاف بھی وارنر نے 50 رنز کی نصف سنچری اننگز کھیلی تھی اور اس فارم کو اگر وہ جاری رکھتے ہیں تو ایک بار پھر نتیجہ حیدرآباد کے حق میں ہو سکتا ہے ۔
حیدرآباد کے گیند بازوں میں محمد نبی، راشد خان، سندیپ شرما، خلیل احمد، بھونیشور کمار اور سدھارتھ کول ہیں جنہوں نے مسلسل متاثر کیا ہے ۔کے کے آر کے خلاف گزشتہ میچ میں خلیل تین وکٹ لے کر سب سے کامیاب رہے تھے ۔ وہیں افغانستان کی عالمی کپ ٹیم کا حصہ اسپنر راشد بھی اب تک نو میچوں میں 9 وکٹ لے چکے ہیں۔ چنئی کے مقابلے میں حیدرآباد کہیں متوازن دکھائی دے رہی ہے ، لیکن تین بار کی چمپئن چنئی میں بھی واپسی کی صلاحیت ہے جو اپنے پانچویں گھریلو میچ میں واپسی کی کوشش کرے گی۔
یو این آئی ۔ این اے
NNNN

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں