شہرو ں اور قصبوں میںعنقریب ذبح خانے قائم ہونگے:فوڈ کمشنر، صارفین کو معیاری گوشت فراہم ہوگا،ہوٹل مالکان ،بیکری اور پکوڑے بنانے والوں کو قواعد و ضوابط پر عمل کرنے کی ہدایت

سرینگر/اے پی آئی/وادی میں لو گوں کو میعاری گو شت فرا ہم کر نے کا ارادہ ظاہر کرتے ہو ئے فوڈ اینڈڈرگ کمشنر نے پکوڑے ، بیکری اور ہوٹل چلا نے والوں کو متنبہ کرتے ہو ئے کہا کہ وہ قوا ئدو ضوابط پر عمل کرے بصورت دیگر قا نونی کاروا ئی کا سا منا کرنے کیلئے تیار رہے مضر صحت کھا نے پینے کی اشیائ کسی کو فروخت کرنے کی اجازت نہیں دی جا ئے گی اور نہ ہی لوگوںکی جانوں کو خطرے میں ڈالا جا سکتا ہیں، فوڈ اینڈ ڈرگ کمشنر عبد الکبیر نے کہا کہ 12,13نو مبر کوایک اعلیٰ سطحی میٹنگ منعقد ہو نے جا رہی ہے جس میں وادی کے بڑے شہروں قصبوں میںزبح خانوں کاقیام عمل میں لانے کے بارے میں تبا دلہ خیال کیا جائے گا اور یہ بات یقینی بنا ئی جا ئی گی کہ لوگ اعلیٰ میعار کے گو شت خریدنے کیلئے پیسے خرچ کررہے ہیں اور انہیں اعلیٰ میعار کا گوشت ہی فرا ہم کیا جائے گا ۔انہوںنے کہا کہ نئے ذبح خا نوں میں وہ تمام سہولیات دستیاب ہونگی جس سے بھیڑ بکریوںکے صحت مند ہو نے یابیمار ہو نے کے بارے میں جانکاری ملے گی ۔انہوںنے گفتگو کے دوران انکشاف کیا کہ اگر پکوڑے اور آ لو فروخت کر نے والے بار بار کڑھائی میں ڈالے گئے تیل کو استعمال کر رہے ہے تو یہ زہر بن جاتا ہے پکوڑے اور آ لو تلنے کیلئے کڑھا ئی میں ڈالے گئے تیل کو زیادہ سے زیادہ تین بار استعمال کیا جاسکتا ہے اس کے بعد یہ تیل لوگوںکیلئے جان لیوا ثابت ہوسکتا ہے ۔فوڈ اینڈ ڈرگ کمشنر نے لوگوں سے بھی تلقین کی کہ تلے ہو ئے آ لو اور پکوڑے خریدتے وقت اس بات کا خیال رکھے کہ بنا نے والے نے کیا قوا ئدو ضوابط پر عمل کیا کہ نہیں ۔انہوںنے کہا کہ فوڈ ایکٹ میں 2011,13,14,15کے دوران تر میم کی گئی ہے اور کسی کوبھی مضر صحت اشیائ فروخت کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی ۔بیکری بنا نے والوں اور ہوٹل چلانے والوں کو متنبہ کر تے ہو ئے انہوںنے کہا کہ ہوٹل مالکان اپنے کچن اور استعمال میں لائے جانے والے برتن کا خاص خیال رکھے اور اتنا ہی پکوان پکوا ئے جو ایک دن میںانہیں خرچ ہو جائے ایک دن کا پکوان دوسرے ددن گا ہکوں کو نا کھلا ئے گا ہکوںکو بھی چا ہئے کہ وہ بیمار یوںسے بچنے کیلئے ایسی غذا اور پکوان کا استعمال کرے جو تازہ ہو کسی کو بھی اپنی زندگی کے سا تھ کھلوار ڑکر نے کی اجازت نہ دے ۔          

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں