شوپیان میں باپ اپنے بیٹے کی خبر سن کر دل کا دورہ پڑنے سے فوت ہوگیا

سرینگر/ یو این آئی /جنوبی کشمیر کے ضلع شوپیان کے میمندرمیں منگل کی صبح محمد اسحاق نائیکو نامی شخص اُس وقت دل کا شدید دورہ پڑنے سے فوت ہوگیا جب اسے غلط خبر دی گئی کہ اس کا جنگجو بیٹا کنڈلن شوپیان میں سیکورٹی فورسز کے محاصرے میں پھنس گیا ہے۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ میمندر کے رہنے والے محمد اسحاق نائیکو کو منگل کی صبح اُس وقت دل کا شدید/جاری صفحہ نمبر ۱۱پر
 دورہ پڑاجب اسے بتایا گیا کہ اس کا بیٹا زینت الاسلام کنڈلن شوپیان میں ہونے والے مسلح تصادم میں سیکورٹی فورسز کے محاصرے میں پھنس گیا ہے۔ تاہم یہ خبر بعدازاں غلط ثابت ہوئی۔ محمد اسحاق نائیکو کے بیٹے زینت الاسلام نے مبینہ طور پر حال ہی میں جنگجو تنظیم جیش محمد کی صفوں میں شمولیت اختیار کی ہے۔ سرکاری ذرائع نے بتایا ’محمد اسحاق کو اپنے اہل خانہ نے ضلع اسپتال شوپیان منتقل کیا لیکن ڈاکٹروں نے اسے وہاں مردہ قرار دے دیا‘۔ انہوں نے بتایا ’زینت الاسلام کی میمندر میں سیکورٹی فورسز کے محاصرے میں پھنسے کی خبر محض افواہ تھی‘۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں