فرانس کے وزیر خارجہ ایران میں جوہری معاہدے پر بات کرینگے

تہران/ فرانس کے وزیر خارجہ ڑان مارخ ایغو سوموارکو ایران پہنچے ہیں جہاں وہ ایرانی رہنماؤں سے 2015 کے جوہری معاہدے اور ایران کے شام میں کردار کے حوالے سے بات چیت کریں گے۔ ڑان مارخ ایغو نے تہران پر یہ واضح کیا ہے کہ وہ ’ڈونلڈ ٹرمپ کے نمائندے کے طور پر دورہ نہیں کر رہے ہیں۔ فرانسیسی وزیر خارجہ نے یہ دورہ جنوری میں کرنا تھا لیکن ایران میں جاری پرتشدد مظاہروں کے باعث اس کو ملتوی کر دیا گیا تھا۔ وزیر خارجہ کی ٹیم نے میڈیا کو بتایا کہ ’فرانس جوہری معاہدے کو برقرار رکھنا چاہتا ہے کیونکہ یہ کارآمد ہے، مضبوط ہے اور کیونکہ ایران اس کی پاسداری کر رہا ہے۔‘ تاہم فرانسیسی وزیر خارجہ نے کہا کہ ایران جب تک بیلسٹک میزائلوں کے تجربے نہیں روکے گا تب تک شک رہے گا کہ ایران جوہری ہتھیار بنانا چاہتا ہے۔ یاد رہے کہ ایران اس بات کی تردید کرتا ہے کہ وہ جوہری ہتھیار بنا رہا ہے اور اس کا موقف ہے کہ میزائل سراسر دفاعی نوعیت کے ہیں اور اس بارے میں وہ کوئی بات چیت کے لیے تیار نہیں ہیں۔ ایران نے فرانس کی جانب سے معاشی اور سیاسی حوالے سے رابطے کو سراہا ہے۔ گذشتہ سال ایران نے فرانس کی کمپنی ٹوٹل کے ساتھ پانچ بلین ڈالر کا معاہدہ کیا تھا۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں