شمالی کوریا شامی کیمیائی اسلحہ کارخانوں کو سامان بھیج رہا ہے

واشنگٹن/ 28فروری/ امریکی ذرائع ابلاغ نے اقوام متحدہ کے ماہرین کے حوالے سے بتایا ہے کہ شمالی کوریا شام کو ایسا سازوسامان بھیج رہا ہے جو کیمیائی ہتھیاروں کی تیاری میں استعمال ہو سکتا ہے۔ رپورٹ کے مطابق اس سامان میں تیزاب کی مدافعت رکھنے والے ٹائلیں، والوز اور پائپ شامل ہیں۔ امریکی اخبار دی نیویارک ٹائمز نے اقوام متحدہ کی ایک رپورٹ کے حوالے سے کہا ہے کہ شمالی کوریا کے میزائل ماہرین کو شام میں اسلحہ بنانے والے کارخانوں میں دیکھا گیا ہے۔ خیال رہے کہ اقوام متحدہ کی یہ رپورٹ ابھی جاری نہیں ہوئی ہے۔ شامی حکومت نے مبینہ طور پر اقوام متحدہ کے پینل کو بتایا ہے کہ ملک میں جو بھی شمالی کوریائی باشندے ہیں وہ سپورٹس اور ایتھلیٹکس کے کوچز ہیں۔ یہ الزامات شامی افواج کی جانب سے کلورین گیس کے استعمال کے تازہ الزامات کے بعد سامنے آئے ہیں لیکن شامی حکومت ان کی تردید کرتی ہے۔ رپورٹ کے مطابق شمالی کوریا نے شام کو جو چیزیں غیر قانونی طریقے سے بھیجی ہیں ان میں شدید حرارت اور تیزاب سے مدافعت والی ٹائلز، زنگ نہ لگنے والے والوز اور تھرمامیٹر شامل ہیں۔ کہا جاتا ہے کہ یہ ٹائلز ایسی جگہ پر استعمال ہوتی ہیں جہاں کیمیائی اسلحہ بنایا جاتا ہے۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں