شام نے اینٹی میزائل طیارے تعینات کئے

بیروت/ 6فروری ﴿رائٹر﴾ شام نے ملک کے حلب اور ادلب علاقے میں نئے جنگی طیارے اور اینٹی میزائل سسٹم تعینات کیا ہے ۔ شامی فوج کے ایک کمانڈر نے بتایا کہ اس ہوائی دفاعی نظام کا دائرہ شام کے شمالی حصے میں حلب اور ادلب تک ہوگا۔ دوسری طرف ترکی نے کرد علاقے عفرین کو ہدف بناکر جنگی طیاروں کی تعیناتی کر رکھی ہے ۔ ترکی کی اس کارروائی کی مخالفت میں شامی حکومت نے اپنے ملک کی فضائی حدود میں ترکی کے کسی بھی طیارے کو مار گرانے کی دھمکی دی ہے ۔امریکہ کی زیر قیادت اتحاد فوج نے بھی شمالی شام میں اسلامک اسٹیٹ کے خلاف مہم چھیڑ رکھی ہے ۔ ایران نے ترکی سے شام میں فوجی کارروائی بند کرنے کی اپیل کی دریں اثنائ ایران نے ترکی سے شام میں فوجی کارروائی بند کرنے کی اپیل کی ہے ۔ ایران کی سرکاری خبر رساں ایجنسی ارنا نے وزارت خارجہ کے ترجمان بہرام قاسمی کے حوالے سے کل کہا کہ ترکی کو شام میں اپنا فوجی آپریشن بند کر کے شام کی خودمختاری اور علاقائی سالمیت کا احترام کرنا چاہئے ۔ مسٹر قاسمی نے کہا کہ ترکی کی فوجی کارروائی سے شام میں دوبارہ عدم تحفظ، عدم استحکام اور دہشت گردی پنپ سکتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ شام کے بحران کا حل صرف بات چیت کے ذریعے ہی کیا جانا چاہئے ۔ ادھر شامی حکومت کی فوج کی جانب سے صوبہ ادلب میں باغیوں کے خلاف کلورین گیس کے استعمال کی رپورٹوں پر امریکہ نے سخت تشویش ظاہر کی ہے ۔
 امریکی محکمہ دفاع نے پیر کے روز ایک بیان میں یہ اطلاع دیتے ہوئے کہا ہے کہ شامی حکومت کی ہرکارروائی کا دفاع کرکے روسی حکومت اپنے وعدے نبھانے سے قاصر رہی ہے ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں