سانحہ سوپور : مزاحمتی قیادت کی جانب سے 6جنوری کو سوپور میں ہڑتال کی اپیل

سرینگر//(آفتاب ویب ڈیسک ) سید علی گیلانی ، میر واعظ عمر فاروق اور یٰسین ملک پر مشتمل مشترکہ مزاحمتی قیادت نے سانحہ سوپور کے 25سال پورے ہوجانے پر 6جنوری کو سوپور میں مکمل ہڑتال کرنے کی اپیل کی ہے۔ قابل ذکر ہے کہ 6جنوری1993کو سوپور میں فورسز کے ہاتھوں 55عام شہریوں کا قتل ہوا تھا ۔چنانچہ اس سانحہ کے 25ویں برسی پر مشترکہ مزاحمتی قیادت نے سوپور کے عوام کو” مکمل ہڑتال کرنے اور جامع مسجد سوپور میں نماز ظہر کے بعد جلسہ عام منعقد کرنے علاوہ مزارِ شہداءتک ایک پُرامن جلوس نکالنے کی کال دی ہے.اس ضمن میں موصولہ بیان میں کہا گیا ہے کہ ”55انسانی جانوں کو آگ میں بھسم کرکے انگاروں میں تبدیل کیا گیا اور اُن کے رشتہ دار ان کو پہچان بھی نہیں سکے۔ “بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ ” زندہ قومیں اپنے شہداءکو فراموش نہیں کرتی ہیں اور وہ اس مشن کے پورا ہونے تک اپنی جدوجہد کو جاری رکھتی ہیں، جس کے لےے انہوں نے اپنی عزیز جانوں کو قربان کیا ہوتا ہے۔“ مشترکہ قیادت نے قصبہ سوپور کے تمام زندہ دل شہریوں سے اپیل کی ہے کہ وہ اپنی اپنی مقامی مساجد میں ظہر کی نماز ادا کرنے کے بعد جامع مسجد سوپور میں جمع ہوجائیں، جہاں مشترکہ قیادت کے اہتمام سے ایک جلسہ منعقد ہوگا اور اس میں شہداءکی ایصال وثواب کے لےے اجتماعی دُعا مانگنے کے ساتھ ساتھ اُس مقصد کی آبیاری کے تقاضوں کو بھی اُجاگر کیا جائے گا.... جامع مسجد میں شہداءکو خراج عقیدت ادا کرنے کے بعد مزارِ شہداءتک اجتماعی طور جلوس کی صورت میں پُرامن اور منظم طور جایا جائے اور فاتحہ پڑھنے کے ساتھ ساتھ عہد کیا جائے کہ شہداءکے مشن کو آگے بڑھایا جائے۔
مزید دیکهے

متعلقہ خبریں