لیتہ پورہ فدائین حملے کے پس منظر میں نئی دہلی میں خفیہ اداروں کے افسروں کی میٹنگ پکھرپورہ، موہن پورہ اور فٹلی پورہ میں فوج کو متحرک کردیا گیا

نئی دہلی /لیتہ پورہ میں فدائین حملے کے اختتام پذیر ہونے کے ساتھ ہی یہاں خفیہ اداروں سے وابستہ افسروں کا اہم اور غیر معمولی اجلاس طلب کیاگیا جس میں اس فدائین حملے کے بارے میں تبادلہ خیال کیا گیا ۔اس سلسلے میں ایک مقامی خبر رساں ایجنسی جے کے این ایس نے باوثوق ذرایع کے حوالے سے بتایا کہ اس اجلاس میں اس بات پر غور کیاگیا کہ کس طرح ایک کمسن سولہ برس کا لڑکا اس کیمپ کے اندر داخل ہونے میں کامیا ب ہوگیا جہاں عام حالات میں پرندہ بھی پر نہیں مارسکتا تھا ۔اجلاس میں کہا گیا کہ وادی کے تمام فورسز کیمپوں اور اہم تنصیبات پر سخت پہرہ بٹھانے کے علاوہ ان کی نگرانی کے لئے جدید سائینسی آلات نصب کئے گئے ہیں ۔لیکن اس کے باوجود فدائی کس طرح اندر داخل ہونے میں کامیاب ہوگئے جہاں انہوں نے پانچ فورسز اہلکاروں کو ہلاک کردیا ۔بتایا جاتا ہے کہ اس دوران وزارت داخلہ نے اس کی تحقیقات کے احکامات صادر کئے ہیں جبکہ اس طرح کے امکانی حملوں کو ٹالنے کے لئے نئی حکمت عملی ترتیب دینے کا فیصلہ کیاگیا ہے ادھر خبر رساں ایجنسی کے مطابق پکھر پورہ ، موہن پورہ ، فٹلی پورہ علاقوں میں فوج کو متحرک کیا گیا ، جگہ جگہ سیکورٹی فورسز لوگوں کو گاڑیوں سے اُتار کر تلاشی لے رہے ہیں۔ معلوم ہوا ہے کہ پکھر پورہ میں فوج نے رات کا گشت بڑھا دیا ہے کیونکہ فوج کو جنگجوئوں کی نقل وحرکت کے بارے میں اطلاع موصول ہوئی ہے۔ جے کے این ایس کے مطابق وسطی ضلع بڈگام کے پکھر پورہ اور اُس کے ملحقہ علاقوں میں فوج کا گشت بڑھا دیا گیا ہے۔ /جاری صفحہ ۱۱ پر
 معلوم ہوا ہے کہ گزشتہ شام فوج نے پکھر پورہ سے منسلک گائوں کومحاصرے میں لے کر گھر گھر تلاشی لی جس دوران مکینوں کے شناختی کارڈ باریک بینی سے چیک کئے گئے ۔ معلوم ہوا ہے کہ فٹلی پورہ ، پکھر پورہ اور موہن پورہ گائوں میں فوج نے گشت تیز کردیا کیونکہ فورسز کو اطلاعات موصول ہوئی ہے کہ پکھر پورہ اور اُس کے ملحقہ علاقوں میں رات کے دورا ن جنگجو گھوم پھیر رہے ہیں۔ ذرائع نے بتایا کہ چونکہ پکھر پورہ پلوامہ سے صرف چار کلومیٹر کی دوری پر واقع گائوں ہے جبکہ دشوار گزار پہاڑی راستے ہونے کے باعث جنگجو ئوں کی نقل وحرکت کو فورسز ذرائع نے خارج ازامکان قرار نہیں دیا۔ ذرائع نے مزید بتایا کہ جب سے فٹلی پورہ میں سیکورٹی فورسز نے جھڑپ کے دوران تین جنگجوئوں کو مار گرایا تب سے پکھر پورہ کے پہاڑی علاقوں میں سیکورٹی فورسز نے گشت تیز کر دیا ہے ۔ دفاعی ذرائع نے اس بات کی تصدیق کی کہ پکھر پورہ میں فورسز کا گشت بڑھا دیا گیا ہے کیونکہ مصدقہ اطلاع ملی ہے کہ پکھر پورہ کے پہاڑی علاقوں میں جنگجو گھوم پھیر رہے ہیں۔ دفاعی ذرائع کے مطابق لوگوں کے جان ومال کو تحفظ فراہم کرنے کی خاطر ہی فوج نے گشت تیز کیا ہے۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں