بچے کی نادانی نے نیویارک میں 12افراد کی جان لی

نیویارک/رائٹر/امریکہ کے نیو یارک شہر کی ایک کثیر منزلہ عمارت میں حال ہی میں لگی آگ کی اصل وجہ تین سالہ بچے کا جلتے ہوئے اسٹوو سے کھیلنا تھا جس میں چار بچوں سمیت 12افراد کی موت ہوگئی تھی۔ آگ کی وجوہات کی جانچ کرنے والے ایک افسر نے یہ اطلاع دی۔1990 کے بعد خوفناک حادثوں کی جانچ کرنے والے افسر نے کیرین فرینکس خاندان کے بچے کی ماں کے حوالے سے بتایا کہ معصوم بچہ آنکھ بچاکر بار بار باورچی خانے میں جلتے ہوئے گیس کو پکڑنے کے لئے بھاگتا تھا اور اس کی یہ عادت سی بن گئی تھی۔حادثے والے دن بھی وہ باورچی خانے میں پہنچ کر آگ سے کھیلنے لگا۔فائربریگیڈ محکمے کے کمشنر ڈینئل نیگرو نے بتایا کہ پانچویں منزل پر رہنے والے اس خاندان کا بچہ جمعرات کوآدھی رات میں باورچی خانے میں چلا گیا اور وہاں سے اس کے چیخنے کی آواز آئی اورپھر دھواں اور آگ کی لپٹیں اٹھتی دکھائی دیں۔فوری طورپر اس کی ماں بچے اور اس کے چھوٹے بھائی کو لے کر باہر کی طرف بھاگی اور دروازے کو اس نے کھلا چھوڑ دیا۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں