راجوری سیکٹر میں شدید گولہ باری ،میجر سمیت 4فوجی ہلاک - سرحدی آبادی انتہائی خوفزدہ ،ترک سکونت کا سلسلہ شروع ہوگیا سرحدوں پر بڑے ہتھیار پہنچائے جارہے ہیں

سرینگر/یو پی آئی /راجوری سیکٹر میں پاک بھارت افواج کے درمیان شدید گولہ باری کے نتیجے میں بی ایس ایف آفیسر سمیت 4 اہلکار مارے گئے ۔ بی ایس ایف ترجمان نے اسکی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ راجوری کے کریری سیکٹر میں پاکستانی رینجرس نے بی ایس ایف چوکی پر بھاری ہتھیاروں سے حملہ کیا جس کے نتیجے میں بی ایس ایف میجر سمیت 4 اہلکار ہلاک ہوئے ہیں۔ راجوری کے کریری سیکٹر میں پاک بھارت افواج کے درمیان اچانک شدید گولہ باری کا تبادلہ شروع ہوا۔ معلوم ہوا ہے کہ پاکستانی رینجرس نے بی ایس ایف چوکیوں کو نشانہ بناتے ہوئے اُس پر موٹار شلوں کی بارش کی جس کے نتیجے میں بی ایس ایف چوکی زمین بوس ہو گئی اور اس میں موجود بی ایس ایف میجر سمیت4 اہلکار شدید طورپر زخمی ہوئے اگر چہ انہیں فوری طورپر نزدیکی اسپتال منتقل کیا گیا تاہم ڈاکٹروں نے چاروںکو مردہ قرار دیا۔ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ کریری سیکٹر میں شدید گولہ باری کا تبادلہ جاری ہے اور آر پار جانی نقصان ہونے کی لگاتار اطلاعات موصول ہو رہی ہیں۔ نمائندے کے مطابق کریری سیکٹر کے سرحدی علاقہ کے نزدیک رہائش پذیر لوگ خوف ودہشت میں مبتلا ہو گئے ہیں اور شدید گولہ باری کے باعث مکین گھروں میں سہم کر رہ گئے ہیں ۔ ذرائع کے مطابق چونکہ پاکستانی رینجرس نے بی ایس ایف چوکیوں /جاری صفحہ نمبر ۱۱پر
کو موٹار بموں سے نشانہ بنایا ، بی ایس ایف اہلکاروں نے بھی رینجرس کی گولہ باری کا سختی کے ساتھ جواب دیتے ہوئے موٹار کا استعمال کیا ۔ میڈیا رپورٹوں کے مطابق پاک بھارت افواج کے درمیان کریری سیکٹر میں گھمسان کی جھڑپ جاری ہے ،معلوم ہوا ہے کہ نوشہرہ سیکٹر میں بھی پاک بھارت افواج کے درمیان گولہ باری کا تبادلہ شروع ہوا ہے جس کی وجہ سے سرحدوں کے نزدیک رہا ئش پذیر لوگ خوف و دہشت میں مبتلا ہو گئے ہیں۔ بی ایس ایف ترجمان نے اسکی تصدیق کرتے ہوئے کہاکہ 120انفٹنٹری بریگیڈ سے وابستہ میجر پرفول سمیت 4اہلکار ہلاک ہوئے ہیں ۔ ترجمان کے مطابق پاکستانی رینجرس کی گولہ باری کا سختی کے ساتھ جواب دیا گیا ۔ ترجمان کے مطابق پاکستانی رینجر س اور بارڈر سیکورٹی فورسز کے درمیان گولہ باری کا تبادلہ جاری ہے اور جاں بحق اہلکاروں کی موت کا رینجرس سے ضرور بدلہ لیا جائے گا۔ بتایاجاتا ہے کہ سرحدی آبادی نے ترک سکونت کا سلسلہ شروع کی اہے ، کیونکہ سرحد پر بھاری ہتھیار پہنچائے جارہے ہیں ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں