بی جے پی دستاویز الحاق کے ایسے مخصوص حصوں کا تذکرہ کرتی ہے جو اس پارٹی کیلئے کارآمد ثابت ہورہے ہیں :عمر عبداللہ

سرینگر /کے این ایس /ریاست کے سابق وزیر اعلی اور نیشنل کانفرنس کے کار گذار صدر عمر عبداللہ نے مرکزی وزیر مملکت براے امور داخلہ ہنس راج گنگا رام اہیر کے حالیہ بیان پر تبصرہ کرتے ہوے کہا کہ دستاویز الحاق جس کے تحت کشمیر بھارت کے ساتھ جڑ گیا کے تحت کرنسی ،اطلاعات ،ڈیفنس اور خارجی امور کے بغیر تمام اختیارات ریاستی حکومت کے پاس رہے ۔اہیر نے کہا تھا کہ وزیراعظم مودی کی قیادت میں ہم اس بات کی ہمت رکھتے ہیں کہ پاکستان کے زیر انتظام کشمیر کا مسلہ حل کریں اور وزیر اعظم اس بارے میں عنقریب کام شروع کررہے ہیں ۔عمر عبداللہ نے کہا کہ دستاویز الحاق کے بعض ایسے حصوں کو چن چن کر نہیں اٹھایا جاسکتا ہے جو بی جے پی کی سیاست کے لئے کارآمد ثابت ہوسکتے ہیں اور اس کے باقی حصوں کو نظرانداز کیا/جاری صفحہ نمبر۱۱پر
جاے گا۔انہوں نے کہا کہ بی جے پی نے دستاویز الحاق کے ان نکتوں کو ابھارا جو ان کے لئے کارآمد ثابت ہوسکتے ہیں لیکن اس حصے کے بارے میں بی جے پی کا کیاکہنا ہے جو کشمیر کو خودمختاری کی گارنٹی دی گئی ہے ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں