صوبائی کمشنر نے سرینگر میں ٹریفک کی صورتحال کا جائزہ لیا

سرینگر/سرینگر میں تمام شاہرائوں پر ٹریفک کی باقاعدہ اوربلا خلل نقل وحرکت کو یقینی بنانے کیلئے ڈویژنل کمشنرکشمیر بصیر احمد خان نے آفیسران پر ایک ہفتے کے اندر اندر نئی پارکنگ جگہوں کی نشاندہی کرنے کے سلسلے میں حتمی فیصلہ لینے کی ہدایت دی تاکہ لوگوں کو ٹریفک کے دبائو سے نجات مل سکے۔صوبائی کمشنر نے ان باتوں کا اظہار آج ایک میٹنگ کے دوران کیا جس میں سرینگر میں ٹریفک کی موجودہ صورتحال کاجائزہ لیا گیا۔میٹنگ میں ترقیاتی کمشنر سرینگر ،کمشنر ایس ایم سی،ڈی آئی جی ٹریفک،ٹریفک ایڈوائزر اورجوائنٹ ڈائریکٹر انفارمیشن کشمیر کے علاوہ ایس پی ٹریفک اوردیگر آفیسران بھی موجود تھے۔صوبائی کمشنر نے میٹنگ میںبتایا گیا کہ سرینگر میں مزید نئی28پارکنگ جگہوں کی نشاندہی کرنے کی ضرورت ہے جنہیں پیڈ پارکنگ کے طو رپر استعمال کیا جائے گا۔انہوںنے ایس پی ٹریفک اوردیگر آفیسران پرزوردیا کہ وہ اس سلسلے میں ایک ہفتے کے اندر اندر زمینی سروے کریں۔میٹنگ میںدیگر اقدامات بشمول بون اینڈ جوائنٹ ہسپتال کے نزدیک برزلہ پُل کے کے متصل بنڈ سڑک کو کھولنے اورمختلف جگہوں پر پاور یوٹیلٹیزکو منتقل کے علاوہ بادامی باغ میں واٹر پائپ لائین کی مرمت کرنے کا بھی فیصلہ کیا گیا۔اس دوران صوبائی کمشنر نے گاڑیوں کی ناجائز پارکنگ کو روکنے اور غیر قانونی تجاوزات کو ختم کرنے اورمصروف شاہرائوں پر چھاپڑی فروشوں کو ہٹانے کی مہم میں سرعت لانے پر زوردیا۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں