ریاستی کابینہ کے اجلاس میں مختلف انتظامی نوعیت کے فیصلوں کو منظوری دی گئی ڈیلی ویجروں اور کیجول لیبروں کی مستقلی کے لئے روڈ میپ بنانے محکمہ فا ئنانس کو ہدایات

سرینگر /ریاستی کابینہ کا کل یہاں ایک اجلاس وزیر اعلی محبوبہ مفتی کی صدارت میں منعقد ہوا جس میں مرکز کی طرف سے کشمیر پر جامع مذاکراتی عمل شروع کرنے کے اعلان کا خیر مقدم کیاگیا ہے ۔کابینہ میں بتایا گیا کہ مذاکرات کا عمل شرو ع کرنے کالوگوں کا دیرینہ مطالبہ تھا جسے مرکز نے عملی جامہ پہنایا ۔ریاستی کابینہ نے بہت سے انتظامی فیصلے کئے جن میں ڈیلی ویجروں ،کیجول لیبروں اور سیزنل لیبروں کے علاوہ دوسرے ورکروں کی مستقلی کے لئے روڈ میپ بنانے کو منظوری دی ہے اس سلسلے میںمحکمہ خزانہ کو ضروری ہدایات دی گئی ہیں ۔ریاستی کابینہ کے اجلاس میں دو آرکیٹیکچر سکولوں کے لئے بیس عہدوں کے /جاری صفحہ نمبر ۱۱پر
قیام کی منظوری دی گئی ۔اس کے علاوہ ریاستی قانون ساز اسمبلی اور کونسل میں کئی نئے عہدے معرض وجود میں لانے کو بھی منظوری دی گئی ہے ۔اس کے علاوہ کابینہ نے چار فاسٹ ٹریک عدالتوں کے بھی قیام کی منطوری دی ہے ۔کابینہ کے اس اجلاس میں ریاستی ہائی کورٹ کے لئے رجسٹرار اور جوائینٹ رجسٹرار آئی ٹی کے پوسٹوں کی بھی منظوری دی گئی ہے ۔اس کے علاوہ کانفیڈ ملازمین کو کواپریٹیو محکمے میں ضم کرنے کا اعلان کیاگیا ہے ۔اس کے ساتھ ریاستی واٹر پالیسی اور پلان کو بھی منظوری دی گئی ہے ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں