صورہ اور اسکے ملحقہ علاقوںمیں نوجوانوں کی دھڑا دھڑ گرفتاریاں لوگوں نے سڑکوں پر آکر احتجاجی مظاہرے کرکے گرفتارافراد کی رہائی کا مطالبہ کیا

سر ینگر/ اے پی آ ئی/صورہ اور اس کے ملحقہ علاقوں میں اس وقت سنسنی اور خوف و دہشت کا ماحول پھیل گیا جب در جنوں نوجوان سڑکوں پر نکل آ ئے اور پولیس کی جانب سے کئی نوجوانوں کی مبینہ گرفتار یوںکے خلاف احتجاج مظاہرے کئے۔ایس ایس پی حضرتبل کے مطابق امن و قانون کو بھرقرار رکھنے کی خاطر پولیس کی جا نب سے کاروا ئیاں عمل میں لائی جاتی ہے تا ہم ذرائع ا بلاغ کو اس بارے میں تفصیلات فراہم نہیں کی جاسکتی ہے ۔ 8اگست نماز مغرب کے بعد صورہ اور اس کے ملحقہ علاقوں میں اس وقت سنسنی اور خوف و دہشت کاماحول پھیل گیا جب در جنوں نو جوان سڑکوں پرنکل آ ئے اور الزام لگا یا کہ پولیس نے سنگباری کرنے ،امن امان میںرخنہ ڈالنے کے الزام میں نصف درجن کے قر یب نوجوانوں کی گرفتار یاں عمل میں لائی ۔گرفتار یوں کی خبر پھیلتے ہی صورہ میںاناً فاناًدوکا نیں بند ہوئی او رپبلک ٹرانسپورٹ سڑ کوں سے غا ئب ہوا ۔خبر رساں ادارے نے جب نوجوانوں کی گرفتا ریوں کا معاملہ ایس ایس پی حضرتبل کی نوٹس میں لایاتو انہوں نے کہاکہ امن امان کو قا ئم رکھنے شر پسندعناصر کے خلاف کاروا ئیاں عمل میں لا نے کیلئے پولیس کی جانب سے اقدامات اٹھا ئے جاتے ہے تا ہم صورہ اور اس کے ملحقہ علاقوں میٰں نوجوانوں کی گرفتار یاں لانے یانہ لانے کے بارے میں ذرا ئع ا بلاغ کو تفصیلات فراہم نہیں کی جاسکتی ہے ۔ادھرمقا می لوگوں نے الزام لگا یا کہ پو لیس کی جانب سے نصف درجن کے قر ب نوجوانوں کی جرم بے گنا ہی کے پاداش میں گرفتاریاں عمل میں لا ئی گئی اور اس طرح کی کارو ائیاں عمل میں لانے سے نوجوانوں کامستقبل مخدوش ہوسکتا ہے ۔لوگوں نے گور نرانتظا میہ سے مطالبہ کیاکہ گرفتار کئے گئے نو جوانوں کی رہا ئی عمل میں لائی جائے ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں